Watch videos with subtitles in your language, upload your videos, create your own subtitles! Click here to learn more on "how to Dotsub"

Who is Dajjal?Every Pakistani must watch it part 3(urdu captions)

0 (0 Likes / 0 Dislikes)
اگر اسے یہ کرنا ھے تو منطقی طور پہ یہودیوں کو یقین دلانے کے لیے اسے سب سے پہلے زمین مقدس کو آزاد کرانا ھو گا۔ نمبر دو:اسے یہودیوں کو واپس زمیں مقدس میں لا کر آباد کرنا ھو گا۔نمبر تین:اسے اسرائیلئ حکومت بحال کرنا ھو گی اور یہودیوں کو یہ یقین دلانا ھو گا کہ یہ حضرت داود و سلیمان کی حکومت ھے۔(جو کہ صریح جھوٹ ھے)۔ پھر یہودی اس پہ ایمان لے آئیں گے۔اور لازمی طور پر اسے اسرائیل کو دنیا کی سُپر پاور بنانا ھو گا۔صرف تب ھی وہ یروشلم سے دنیا پہ حکومت کر سکے گا۔اور کہے گا کہ میں مسیح ھوں ۔تب یہودی اس پہ ایمان لے آئیں گے اور وہ اپنے ہاتھ رگڑتے ھوے کہے گا کہ مشن پورا ھوا۔ایک دفعہ حضرت محمد صلی علیہ وسلم کو مدینہ میں ایک یہودی لڑکےابنِ صیاد پہ دجال کا گمان ھوا آپ نے حضرت عمر کو اپنے ساتھ لیا اور اس لڑکے سے چند سوال پوچھے جن کے اس نے بدتمیزی سے جواب دیئے۔ حضرت عمر غصے میں آ گئے۔اور حضور صلی علیہ وسلم سے اس کا سر کاٹنے کی اجازت مانگی ۔حضور صلی علیہ وسلم نے فرمایا ۔نہیں عمر اگر یہ دجال ھے تو تم اسے نہیں مار سکتے اور اگر یہ دجال نہیں تو اسے مارنا گناہ ھو گا ۔کیا میں دوبارہ دہراوں تا کہ آپ کو سمجھ آ جائے؟اگر یہ دجال ھے تو تم اسے نہیں مار سکتے اگر نہیں تو اسے مارنا گناہ ھو گا ۔مطلب ھے کہ وہ دجال ھو سکتا تھا اور اسکا دجال ھو نا تب ھی ممکن تھا اگر دجال کا دنیا میں ظہور ھو چکا ھوتا۔ تو اس واقعے میں دنیا کے لئے چھپا ھوا یہ پیغام ھے کہ دجال کا ظہور محمد صلی علیہ وسلم کے دور میں ھو چکا ھے۔ اگر وہ دنیا میں آ چکا ھے تو کہاں ھے؟اب ھم ایک اور دلچسپ واقعے کی طرف آتے ھیں جو کہ صحیح مسلم میں بیان ھے کہ حضور صلی علیہ وسلم کے ایک صحابی جو کہ عیسائی تھے پھر بعد میں مسلمان ھو گئے انکا نام تمیم داری ھے وہ حضور صلی علیہ وسلم کے پاس آئے اور یہ واقعہ بیان کیا آپ نے سنااور لوگوں کو بیٹھنے کے لیئے کہا۔مجھے تمھیں کچھ بتانا ھے ۔آپ نے فرمایا کہ تمیم داری نے جو واقعہ دجال کے بارے میں بیان کیا ھے وہ اس بات کی تصدیق کرتا ھے جو میں تمھیں بتاتا رہا ھوں اب ھم یہ واقعہ نبی صلی علیہ وسلم کے لبِ مبارک سے سنتے ہیں۔تمیم داری اپنے کچھ ساتھیوں کے ساتھ کشتی میں سمندری سفر پر گئے سمندر میں طوفان آ گیا اور وہ ایک ماہ تک سمندر میں بٹھکتے رہیے۔ایک ماہ بعد وہ ایک جزیرے کے ساحل پہ پہنچے۔وہاں انکا سامنا ایک بالوں والی مخلوق سے ھوا۔ اس کے جسم پہ بے تحاشا بال تھے کہ سر پاوں کا کچھ پتا نا چلتا تھا یہ مخلوق بولی کہ میں جثاثہ(جاسوس) ھوں (۔سورۃ الحجرات میں ھے ک تجسس نہ کرو۔)تو یہ ایک جزیرہ ھے جہاں کے لوگ جاسوسی میں ماہر ہیں۔جثاثہ نے ایک عمارت کی طرف اشارہ کیا کہ کوئی تمھارا انتظار کر رہا ھے یہ لوگ اس طرف بھاگے وہاں انھوں نے ایک جوان گھنگھریالے بالوں والے تنومندآدمی کو زنجیروں میں جکڑا پایا جس کے ہاتھ گردن سے بندھے تھے (یہاں اس کی آنکھوں کے بارے میں کوئی بیان نہیں) ۔اس نے تمیم داری سے چند دلچسپ سوال پوچھے میرے پاس وہ سب بتانے کے لئے وقت نہیں۔پھر اس نے کہا کہ میں دجال ھوں۔ جھوٹا مسیح۔جب میں آزاد ھوں گا تو میں ہر گاوں شہر میں داخل ھوں گا سوائے مکہ مدینہ کے کیونکہ فرشتے ان شہروں کی حفاظت کر رھے ھوں گے۔یہاں ھم یہ جانتے ھیں کہ ابھی تک دجال آزاد نہیں ھوا تھا اور یہ اس جزیرے پہ تھا جو کہ عرب دنیا سے سمندری سفر کے زریعے ایک ماہ کی مسافت پہ ھے ۔وہ جزیرہ جو کہ جاسوسی میں مہارت رکھتا ھے۔اور اب ھم یہ بھی جانتے ہیں کہ جب حضور صلی علیہ وسلم سے ہمیں یہ پیغام پہنچا اسوقت تک دجال آزاد ھو چکا تھا اور ھم یہ بھی جانتے ہیں کہ وہ اس جزیرے پہ تھا۔

Video Details

Duration: 9 minutes and 59 seconds
Country: Saudi Arabia
Language: English
Genre: None
Views: 67
Posted by: knight on Dec 16, 2011

prominent scholar of today

Caption and Translate

    Sign In/Register for Dotsub to translate this video.